سوال کا متن:

انسان کي قوت مردانگي ختم ہو چکي ہے ۔ کافي علاج معالجہ کے باوجود وہ صحيح نہيں ہوا ہے ۔ ڈاکٹرز نے علاج کے ساتھ بليو پرنٹ کا مشورہ ديا ہے کہ بالکل صحيح ہو جائے گا ۔ اب اس کے ليے بليو پرنٹ فلم ديکھنے کا کيا حکم ہے؟


وزیٹر کی تعداد: 342    گروپ کاری: جنسی مسائل         
جواب:

سلام عليکم قوت مردانگي بحال کرنے کے کئي طريقے ہيں جيسے ورزش کرنا اور بعض ديگر جڑي بوٹياں وغيرہ کبھي کبھار اس بيماري کا اصلي سبب ذہني اور نفسياتي دباؤ جيسے ٹينشن اور اسٹريس وغيرہ ہوتا ہے۔ بالکل اسي طرح کبھي کبھار اس کي اصل وجہ جسماني امراض جيسے ديابيطس ہے۔ بہرحال کسي بھي صورت ميں بآساني حرام کام جيسے بليو پرنٹ فلميں ديکھنے کي طرف رجوع نہيں کرنا چاہيے۔ علاوہ بر ايں ماہرين کے کہنے کے مطابق ممکن ہے ايسي فلميں ديکھتے رہنے سے کچھ عرصہ بعد ان کا الٹا اثر ہونے لگے۔ پس وہ شخص کوشش کرے کہ اپنا علاج کسي اور طريقے سے کرائے (جيسے ورزش کرنا، مناسب کھانے کھانا اور جڑي بوٹيوں سے علاج وغيرہ)۔ سب سے پہلے اسے ديکھنا چاہيے کہ اگر وہ کسي ذہني يا نفسياتي مرض ميں مبتلا ہے تو اس کا علاج کرائے۔ اسي طرح وہ اپنا ڈاکٹر تبديل کرے اور کسي سپيشلسٹ اور ديندار ڈاکٹر سے رجوع کرے۔ اور اگر اسے کوئي خاص بيماري ہے تو ضرور اس بيماري کے سپيشلسٹ ڈاکٹر سے علاج کرائے۔ اگر وہ يہ تمام کام انجام دے چکا اور پھر بھي اس کا مسئلہ حل نہيں ہوا تو اسے چاہيے کہ اپنے مرجع تقليد کے دفتر سے رابطہ کرکے رہنمائي حاصل کرے۔ ايک اور قابل ذکر بات يہ ہے کہ اگر قوت مردانگي ختم ہونے سے اس کي مراد يہ ہے کہ وہ اپني بيوي کي طرف کشش محسوس نہيں کرتا تو اس کے لئے ضروري ہے کہ اس صورت ميں اپني بيوي کا حق ادا کرے اور دوسرے طريقوں سے اس کي جنسي تسکين کا سامان کرے۔


منابع اور مآخذ:

گروه پاسخ‏گويي سايت پرسش و پاسخ پورتال اهل‏بيت (عليهم‏السلام) www.abp-miftah.com


فراہم کردہ جوابات لازمی طور پر عالمی اہل بیت ^ اسمبلی کی رائے کی عکاسی نہیں کرتے۔

نام
ایمیل
رائے